Home

سرحد پار کے پیارے لوگو
میرے اپنے سارے لوگو

بس بھی کرو اب ۔۔۔
ختم کرو سب ۔۔۔

کب تک یہ سب مارا ماری؟
کب تک یہ الزام تراشی؟
کب تک دشمن دشمن کھیلیں؟
کب تک غربت بھوک اگائیں؟
کب تک ہم محراب میں آگے؟
کب تک ہم تعلیم میں پیچھے؟
کب تک ایٹم بم کے پیچھے؟
کب تک ہم افلاس میں آگے؟

غربت، فاقے، بھوک میں اول
سینا کی تعداد میں اول
ذلت، پستی، ننگ میں اول
جدل میں اول، جنگ میں اول
طعنے اور تفریق میں اول
گھڑی ہوئی تاریخ میں اول

بس بھی کرو اب ۔۔۔
ختم کرو سب ۔۔۔

کب تک گاندھی گاندھی اچھا؟
کب تک قائد قائد بہتر؟
کب تک تیرا تیرا تیرا؟
کب تک میرا میرا میرا؟
کب تک نیتا، لیڈر حاکم؟
کب تک جنتا اندھی دشمن؟
کب تک جنگ کے شعلے ہر سو؟
کب تک امن رہے بس آشا؟

سرحد پار کے پیارے لوگو ۔۔۔۔۔
میرے اپنے سارے لوگو ۔۔۔۔۔۔۔

آئو مل کر جنگ کریں ہم
لیکن اب یہ آخری جنگ ہو

مل کہ لڑیں ان سب سے جوکہ
ہم کو تم سے روز ڈرائیں
باہم جو نفرت پھیلائیں
زہر بھرے جو تیر چلائیں
جنتا کو جنتا سے لڑائیں
ہنسا کے پرچارک ہیں جو
(مجھ میں تم میں شامل ہیں جو)
آئو مل کر دور بھگائیں

خوشحالی کے نغمے گائیں
بم کا بجٹ، کالج پہ لگائیں

آئو مل کر جنگ کریں پھر ۔۔۔۔۔

سید عاطف علی
7 – فروری – 2014

Advertisements

3 thoughts on “پڑوسیوں کے نام ۔۔۔۔

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s