Home

مختصر سی یہ اک کہانی ہے
اپنی محرومیوں کا قصہ ہے

اس میں کچھ بھی نیا نہیں ہمدم
سب ۔۔ پرانے سنے سے قصے ہیں
جاودانی تھا عشق، خستہ دل۔۔
خیر کہنے سے اب ہے کیا حاصل؟

کیوں سنائوں حدیث عشق و جفا
خیر ۔۔۔ سنتے ہو تو ہوں بتلاتا
مختصر سی یہ اک کہانی ہے

ضربت عشق سہہ نہیں پایا
دل تھا کمزور، ضبط کھو بیٹھا
جاودانی تھا عشق، زندہ ہے
اور شاعر نے خودکشی کرلی۔

سید عاطف علی
14-جنوری-2014

Advertisements

6 thoughts on “افسانہ

  1. جاودانی تھا عشق زندہ ہے،اور شاعر نے خودکشی کر لی واہ کیا خوب لکھا ہے ۔۔۔۔۔۔۔ ماشاللہ

    Like

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s